گرمی میں جسم پر پِت نکلنے اور سرخ دانے نکلنے کا علاج۔

بہت سارے بہنوں بھائیوں نے پوچھا تھا کہ گرمیوں میں پِت نکل آ تی ہے۔ اس کا کوئی علاج بتائیں۔

میرے بھائیو اور میری بہنو پِت کے لیے جو بہترین علاج تین طرح کا ہے۔ سب سے پہلا علاج ۔ میرے بھائیو اور میری بہنو۔ گرمیوں میں پانی با کثرت پیو۔ اور کوشش کر و کہ ہم نے جو پانی پینا ہے وہ پا نی شکنجی کی صورت میں پیو لیموں کی شکنجی بنا ؤ اور اس میں گُڑ ملا کر سبز دھنیاں اور سبز پو دینہ اس کو رگڑ لو ایک گلاس پانی میں ایک چائے کا چمچ سبز دھنیاں اور پو دینہ رگڑا ہوا وہ ملا کے صبح دوپہر شام پیو ۔ پِت کا بہترین علاج ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ دوسرے نمبر پر اس کے لیے بہترین علاج املی اور آلو بخارے کا پانی پیو۔ ایک گلاس پانی میں دو دانے آلو بخارے کے اور تین سے چار دانے املی کے ذرا سا اس میں گڑ ملاؤ

رات کو اس میں بھگو کے رکھو صبح اس میں لیمن ملا کر اس کو چھان کر اس کو پیو بہترین علاج ہے اس کا بہترین علاج ۔ کثرت کے ساتھ سا لا د کھا ؤ سبز پتے والے جو سا لا د کھیرے کی صورت میں مولی کی صورت میں شلجم کی صورت میں لال مولی کی صورت میں میرے بھا ئیو یہ جو سا لا د کے پتے ہیں دھنیاں کے پتے پو دینے کے پتے سالاد کے پتے جتنی سا لا دکی چیزیں ہیں ان کو با کثرت استعمال کر و یہ پِت کا بہترین علاج ہے۔ گرمی کی شدت اور ہوا میں نمی کی زیادتی سے پسینہ زیادہ آتاہے اور اگر یہ پسینہ جلدی سوکھ نہ جائے تو اپنی تیزابیت کی وجہ سے جلد کو نقصان پہنچاتاہے اور جلد میں پسینہ پیدا کرنے والے غدود کی نالیوں میں رکاوٹ پیدا ہوجاتی ہے کبھی وہ پھٹ بھی جاتی ہیں ان نالیوں کے منہ کی بندش کے نتیجہ میں دانے نکلتے ہیں

گرمی میں نکلنے والاہر دانہ پسینہ نکالنے والی ایک نالی کے منہ کی رکاوٹ کا مظہر ہے۔چھوٹے چھوٹے ان گنت دانے ، جو جلدکی سرخی ،خارش اورجلن کا باعث بنتے ہیں اور کپڑو ں کی رگڑسے ان میں مزید اضافہ ہوتاہے۔چھوٹے بچوں میں چہرہ ،گردن،ہاتھوں اور ٹانگوں میں زیادہ دانے نکلتے ہیں جو بچوں کو اضطراب میں مبتلا کردیتے ہیں۔ موسم خوشگوار ہو یا بارش ہوجائے تو دانوں کی تعداد اور علامات میں کمی آجاتی ہے۔۱۔پسینہ کو خشک کرنے کیلئے سوتی ، ہلکے رنگ اور ڈھیلے ڈھالے لباس زیب تن کریں۔۲۔ایسے انتظامات کریں کہ پسینہ کم سے کم آئے اور پسینہ کو جلد از جلد خشک کرنے کی کوشش کریں۔خون صاف کرنے والی ادویات مفید ہیں۔

گرمی دانوں کا پاؤڈر لگائیں اس پاؤڈر سے ٹھنڈک کا احساس اور پسینہ جلد خشک ہوجاتاہے۔گرمی دانوں کے لئے وٹامن سی کی گولیاں وقتی آرام کے لئے بہترین ہیں ۔پھلوں کے سرکہ میں تھوڑا سا پانی ملاکر گرمی دانوں پر لگانے سے فوری آرام آتاہے۔دن میں ایک سے دو مرتبہ لگائیں۔نبی ﷺ نے سنگترے کو دل کے لئے بہترین قرار دیاہے سنگترے کی قاشوں پر شہد لگاکر کھاناگرمی دانوں کی جلن دور کرنے کے لئے بہترین ہے۔میٹھے انار کا جوس اور تربوز گرمی دانوں سے نجات کے لئے مفید ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.