”حضرت علی رضی اللہ عنہ کے اقوال“

حضرت علی رضی اللہ عنہ نے فرمایا: کسی کو اپنی صفائی بیان نہ کرو۔ کیونکہ جو شخص تم کو پسند کرتا ہے۔ اس کو صفائی کی ضرورت نہیں ۔ اور جو تم سے نف رت کرتا ہے۔ وہ کبھی تم پر یقین نہیں کرے گا۔ کسی کا عیب تلاش کرنے والے کی مثال اس مکھی کے جیسے ہے۔ جو سارا خوبصورت جسم چھوڑ کر صرف زخم پر ہی بیٹھتی ہے۔ برا آدمی کسی کے ساتھ نیک گمان نہیں رکھتا۔ کیونکہ وہ ہر ایک کو اپنے جیسا خیال کرتا ہے۔ نبی پاک ﷺ کےپاس بخار کا چرچاکیا گیا۔ تو ایک شخص نے بخار کوبرا کہا۔ نبی کریمﷺ نے فرمایا: بخار کو برا مت کہو اس لیے کہ وہ مومن کو گن اہوں سے اس طرح پاک کرتا ہے ۔جیسے آگ لو ہے کی میل کو صاف کردیتاہے ۔ نیکی پر غرو ر کرنا نیکی کا اجر ضائع کردیتا ہے۔ لفظ انسان کےغلام ہوتے ہیں۔ مگر بولنےسے پہلے ، بولنے کےبعد انسان اپنے لفظوں کا غلام بن جاتا ہے۔

دولت مند ہونےسے انسان اپنے آپ کو بھول جاتا ہے اور دولت نہ ہونے پر لو گ اسے بھو ل جاتےہیں۔ اچھے لوگوں کے ساتھ اچھے سے پیش آنا کمال نہیں ۔ بلکہ برے لوگوں کے ساتھ اچھے سے پیش آنا کمال ہے۔ انسان تین چیزوں سے محروم رہے گا۔ غ صہ والا درست فیصلے سے ، جھوٹ عزت سے ، جلد باز کامیابی سے۔ اگر تم اسے نہ پاسکو جسے تم چاہتے ہو تو تم اسے ضرور پا لینا۔ جو تمہیں چاہتا ہے۔ کیونکہ چاہنےسے زیادہ چاہیں جانے کا احساس خوبصورت ہوتا ہے ۔ انسان بھی کتنا عجیب ہے۔ جب کسی چیز سے ڈرتا ہے۔ تو اس سے دور بھاگتا ہے۔ اور جب اللہ سے ڈرتا ہے تو اس کے اور قریب آجاتا ہے۔ انسان کا نقصان مال اور جان کا چلے جانا نہیں ، انسان کا سب سے بڑا نقصان کسی کی نظر سے گر جانا ہے۔ ضرورت کےلیے اللہ کو پکارنے والے دونوں صورتوں میں اللہ کو چھوڑ دیتے ہیں۔

ضرور ت پوری ہونے پر بھی اور ضرورت پوری نہ ہونے پر بھی۔ دولت ہو تو غیر ملک بھی اپنا ملک ہے۔ اور دولت نہ ہو تو اپنا ملک بھی غیر ملک ہے۔ دوست چاہے جتنا بھی برا بن جائے۔ کبھی اس سے دوستی مت توڑنا۔ کیونکہ پانی چاہے جتنا بھی گندہ ہوجائے آگ بجھانے کے کام توضرور آتا ہے۔ مومن کی مثال ترازو کےپلڑے جیسی ہے جس کا در اس کےایمان میں اضافہ ہوتاہے۔ اتنے ہی اس کی آزمائش بڑھتی جاتی ہے۔ نبی پاک ﷺ نے فرمایا: جو زیادہ مع اف کرے گا۔ اس کی عمر لمبی ہوگی۔ مال م و ت تک ساتھ دیتا ہے۔ اولا دقبر تک ساتھ دیتا ہے۔ اور نیک اعمال حشر تک ساتھ دیتے ہیں۔ لوگوں کے خوف سے حق کی بات کہنے سے مت ڈرو، کیونکہ نہ تو کوئی م و ت کو قریب کر سکتا ہے اور نہ ہی کوئی رزق کو دور کرسکتا ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *