ان بد دعاؤں سے ڈرو۔ جو بول کر نہیں دی جا تیں۔

اللہ سے محبت اور انسان سے محبت میں سب سے بڑا فرق یہ ہے کہ انسان سے محبت ہماری سب سے بڑی کمزوری اور اللہ سے محبت ہماری سب سے بڑی طاقت بن جا تی ہے۔ کسی سے نیکی کر تے وقت بدلے کی امید صرف اللہ سے رکھو۔ ان بد دعاؤن سے ڈرو۔ جو بول کر نہیں دی جا تیں۔ زندگی کے ہر موڑ پر جہاں امتحان ہو تے ہیں اللہ کی مدد بھی وہیں موجود ہو تی ہے۔

مضبوط تو ہو ہے جو رونے کے بعد اپنے آپ کو خود سمجھائے کہ اللہ ہے نہ سب ٹھیک کر نے کے لیے۔ جب تم اس کی چاہت کو اپنی چاہت بنا لیتے ہو تو وہ بھی تمہاری چاہت کے لیے کن فر ما دیتا ہے۔ پھر پریشان نہیں کر تیں انہیں زندگی کی ٹھو کر یں جنہیں اللہ کا نام لے کر سنبھل جانے کی عادت ہو۔ بہترین تحفہ وہ ہے جو ہم کسی کو ان کی غیر موجودگی میں دے سکیں ان کے لیے دعائے خیر کر یں

کیونکہ دعا میں وہ طاقت ہے جو تقدیر بدل سکتی ہے۔ کیا یہ س ز ا کافی نہیں کہ اللہ تمہیں سب کچھ دے کر بھی سجدوں کی توفیق نہیں دیتا۔ وہ آزما تا تو ہے مگر راستہ بھی وہی دکھا تا ہے کیونکہ وہ رب غفورالرحیم ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *