سردیوں میں پاؤں کا ٹھنڈا رہنا

جن افراد کے پاؤں ٹھنڈے رہتے ہیں ان کو سردی بہت زیادہ لگتی ہے اس تحریر میں پانچ نسخے بتائے جائیں گے جس کے استعمال کرنے سے آپ اپنے پاؤں کو سردی لگنے سے بچاسکتے ہیں کیونکہ جب آپ کے پاؤں ہی ٹھنڈے ہوں گے تو پھر جرسی یا سویٹر پہننے کے باوجود بھی سردی کا احساس رہتا ہے جب پاؤں کو سردی لگتی ہے تو باقی جسم میں جلدی گرمائش نہیں آتی اس لئے پاؤں کو سردی سے بچانا بہت ضروری ہے پاؤں کو سردی سے بچانے کے لئے جو نسخے ہم آپ کو بتائیں گے۔وہ بہت ہی آسان ہیں جن کو آپ آسانی سے استعمال کرسکیں گے۔1۔سبز چائے :سبز چائے دوران خون بڑھاتی ہے یہ ٹھنڈے پیروں کے لئے مفید ہے اس میں موجود دیگر اجزاء جسم کو گرم رکھنے میں بہت مفید ہیں

ویسے تو بازار میں بہت سے لوگ چائے بیچتے ہیں لیکن آپ گھر میں بنائیں تو بہتر ہے آپ روزانہ 3 کپ تک پی سکتے ہیں یعنی صبح دوپہر اور رات کو پی لیا کریں اس کے استعمال سے آپ کے پیروں کو گرمائش ملے گی اور آپ سردی سے بچیں گے۔2۔ادرک کی چائے :ادرک کا استعمال جسم میں خون کی سپلائی کو بہتر بنتاتا ہے اس میں پائے جانے والے مرکب اجزاء جسم کو گرم رکھتے ہیں اور پیروں کو ٹھنڈ سے بچاتے ہیں۔ اس کے لئے آپ ایک چائے کا چمچ کٹی ہوئی ادرک لے کر دو کپ پانی میں اُبالیں اور پھر اس کو چھان لیں۔

اس چائے کو آپ دن میں 2 سے 3 مرتبہ پی سکتے ہیں۔3۔آئرن کی مقدار بڑھائیں:آئرن کی کمی میں اکثر ہاتھ پاؤں ٹھنڈے ہو جاتےہیں آئرن کی کمی کو ختم کرنے کے لئے آئرن سے بھر پور غذاؤں کا استعمال کریں مثلا سیب ،کھجور ،پالک،سرخ گوشت اور بادام کا استعمال کریں۔4۔گرم تیل سے مساج: گرم تیل سے مساج کرنا پیروں کے لئے بہت فائدہ مند ہے ،مساج پیروں میں خون کا دورانیہ بہتر کرتا ہے اور جسم کو حرارت پہنچاتا ہے۔5۔پیروں کی ورزش:ورزش کے فائدے اپنی جگہ ہیں جس طرح آپ اپنے جسم کے دوسرے حصوں کی ورزش کرتے ہیں اسی طرح آپ اپنے پیروں کی ورزش کر کے ان کا دورانیہ خون بہتر بنا سکتے ہیں ورزش سے پیر متحرک اور چاق و چوبند رہتے ہیں۔شکریہ

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.