کمر کس اور گوند کا حلوہ 1 چمچ روزانہ کھائیں جوڑوں کا درد کمر کا درد سرمیں درد جسم کا درد سب ختم ہوجائیں گے۔

جوڑوں کے درد اور ہڈیوں و مہروں کی خرابی کے لئے: آجکل تازہ کچی ہلدی مارکیٹ میں آئ ہوئ ہے۔ سبزی والوں کے پاس عام دستیاب ہے۔ دیکھنے میں ادرک جیسی لگتی ہے لیکن ادرک سے چھوٹی اور موٹائ میں کافی کم ہوتی ہے۔ ہلدی بھارت اور پاکستان میں عام کاشت کی جاتی ہے ۔ ہلدی کی سب سے زیادہ پیداوار بھارتی ریاست ” آندرا پردیش” میں ہوتی ہے۔اس ریاست کا شہر “ناظم آباد” ہلدی کی تجارت میں مرکزی حیثیت رکھتا ہے۔ پاکستان کا ضلع قصورہلدی کی پیداوار کے حوالے سے کافی شہرت رکھتا ہے۔میتھی کی طرح قصور کی ہلدی بھی ورائٹی اور معیارمیں دنیا بھرمیں اپنی شناخت رکھتی ہے۔اپریل سے مئی کا مہینہ اس کی کاشت کے لئے موزوں ہیں ۔

کیمیائی تجزیہ کے مطابق ہلدی میں پوٹاشیم، کیشیم، فاسفورس ، فولاد، ،سوڈیم کے علاوہ وٹامن “اے” ، “بی” اور “سی” بڑی مقدار میں موجود ہوتے ہیں۔ اس میں شامل پوٹاشیم دل اور بلڈ پریشرکو کنٹرول کرنے میں مدد دیتا ہےاور اس میں شامل آئرن خون کے سر خ خلیوں کو بڑھاتا ہے۔خون کی کمی دور کرنے کے علاوہ یہ خون کو صاف بھی کرتی ہے۔ ہلدی کے اتنے بے شمار فوائد ہیں کہ اگر لکھنے بیٹھو تو ایک پورا ضخیم ناول بن جائے۔ اس لئے ان سب کی جگہ ہلدی کا ایک ایسا نسخہ لکھا جا رہا ہے کہ جس کے فوائد بے شمار ہیں ۔ اس کو مستقل استعمال کرنے والا ہر طرح کے دردوں اور دیگر کئی بیماریوں سے محفوظ رہے گا۔ ‎جوڑوں کے درد، جسم کی کئی بیماریوں کے لیے مفید ہے۔ میرے چھوٹے بھائی کاایکسیڈنٹ ہوگیا۔

اس کے جسم پراندرونی وبیرونی کافی چوٹیں آئیں۔وہ صحیح طورپرلیٹ نہیں سکتاتھا، بیٹھ نہیں سکتاتھا۔ آپنے بھائی کوہلدی کاحلوہ دودھ کے ساتھ استعمال کروایا اس کی دردیں بھی ختم ہوئیں اوروہ صحیح طورپر چلنے پھرنے لگا۔ ‎میری کزن کی پسلیاں اورریڑھ کی ہڈیاں ایک حادثے میں بری طرح متاثرہوئیں ، ڈاکٹروں نے کہا کہ علاج بہت دیرتک چلے گا ۔ بیلٹ ہروقت پہنناہوگی۔ کزن سے ملاقات کے بعد اسے یہی ہلدی کاحلوہ کھلانے کامشورہ دیا ۔ یقین جانیے اس نے استعمال کیا توبہت جلد جوعلاج 2/3سال میں ہوناتھا وہ چند مہینوں میں ہوگیا۔اورمیرا کزن اللہ کے فضل سے ٹھیک ہوگیا۔ میری امی جان کو سردیوں میں جب جوڑوں کادرد ہویا سردی زیادہ لگے تووہ روزانہ ایک چمچ دودھ کے ساتھ استعمال کرتی ہیں۔

ان کو بہت فائدہ ہوا۔ یہ نسخہ ، جوڑوں ، پٹھوں اور کمر کے درد یا ایسے لوگ جو دن رات اپنے جسم کے دردوں میں تھکے اور الجھے رہتے ہیں اور ان کا جسم ہر وقت جکڑا رہتا ہے ، کندھے کھچے ہوئے ، گردن کھچی ہوئی ، اعصاب کھچے ہوئے، ٹانگوں میں درد ، جی چاہے مجھے کوئی دبائے یا رات کو سوتے ہوئے بار بار بستر پر ٹانگیں پٹخنا اور حاملہ عورتوں کےلئے بہت لاجواب ہے ۔حاملہ خواتین گرم دودھ کے ساتھ چند ہفتے یا چند مہینے دن میں دو تین بار استعمال کریں ۔ پرانی لیکوریا ،کمر کے درد ، اور حمل کے بعد کی تکالیف کو دور کرنے کے لئے بہترین ہے۔ یہ دل کے مریضوں کے لئے جن کا خون گاڑھا ، کولیسٹرول ، یوریا ، یورک ایسڈ بڑھ چکا ہو ،معدہ کے پرانے مریض ،جن کے معدہ اور آنتوں میں انتہائی السر ہو ، بہت زیادہ شراب پینے والے، باہر کے کھانے کھاکر معدہ برباد کرنے والوں کےلئے بھی بہت فائدہ مندہے۔

کچی ہلدی کا حلوہ اجزاء: کچی ہلدی ۔۔ آدھا کلو بیسن ۔۔ آدھا کلو چینی ۔۔۔ آدھا کلو دیسی گھی ۔۔ آدھا کلو کھویا ۔۔ آدھا کلو چھوٹی الائچی کے دانے — ایک کھانے کا چمچہ سونف ۔۔۔ 50 گرام پستہ ۔۔ 100 گرام بادام ۔۔ 100 گرام چاروں گوند ۔۔ 100 گرام ( یعنی ہر گوند 25 گرام) کمر کس ۔– 50 گرام دودھ ۔۔ ایک پاؤ ترکیب: کچی ہلدی کو چھیل کر ایک چاپر میں پیس لیں۔ کڑاہی میں ہلدی اور گھی کو اچھی طرح مکس کر کے ہلکی آنچ پر بھون کر الگ رکھدیں۔۔ ایک الگ کڑاہی میں گھی گرم کریں اور اس میں چاروں گوند فرائی کر کے نکال لیں اور ٹھنڈا ہونے پر گرائنڈر میں پیس لیں۔ ۔

ایک کڑاہی میں بیسن اور گھی ڈآل کر بھونیں۔جیسا بیسن کے حلوے کے لئے بھونتے ہیں۔ پھر اس میں پسے ہوئے، پستہ اور بادام ڈآل کر مکس کریں۔ اس کے بعد کھویا شامل کرلیں۔ ساتھ ہی چینی، دودھ اور الائچی دانہ ڈآل کر ہلکی آنچ پر پکائیں اور مستقل چلاتے جائیں۔ ۔ اب اس میں بھنے ہوئے گوند ، پسا ہوا کمرکس اور سونف ڈال کر اچھی طرح مکس کرلیں۔ سرونگ ڈش میں نکالیں یا کسی شیشے کی برنی میں محفوظ رکھیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.