بدنصیبی اور بری تقدیر سے بچنے کا لاجواب وظیفہ بڑی سے بڑی مشکل، تکلیف کا آسان حل

بری تقدیر اور دشمنوں کے حسد سے بچنے کے لیے۔ جب ہم اپنے گرد و نواح پہ نگاہ ڈالتے ہیں۔ تو مختلف انسانوں کو مختلف طرح کی مصیبتوں میں مبتلا دیکھتے ہیں۔ مشاہدے اور تجربے سے یہ بات بھی واضح بری تقدیر اور دشمنوں کے حسد سے بچنے کے لیے۔

جب ہم اپنے گرد و نواح پہ نگاہ ڈالتے ہیں۔ تو مختلف انسانوں کو مختلف طرح کی مصیبتوں میں مبتلا دیکھتے ہیں۔ مشاہدے اور تجربے سے یہ بات بھی واضح ہوتی ہے ۔کہ مصیبتوں کی زدّ میں آنے والے لوگ اپنے اعمال کے اعتبار سے مختلف طبقات سے تعلق رکھتے ہیں۔ بسا اوقات مصیبتوں کا نشانہ بننے والے لوگ بہت زیادہ نیکوکار اور اسی طرح بعض حدِ اعتدال سے بڑھ جانے والے۔ ظلم اور زیادتیاں کرنے والے ہیں۔ نیکوکاروں کو مصیبتوں میں مبتلا دیکھ کر لوگ بالعموم دکھ اور غم کی کیفیت میں مبتلا ہو جاتے ہیں ۔ اور اللہ تبارک وتعالیٰ کی بارگاہ سے ان نیکوکاروں کے لیے رحمت کے طلبگار بن جاتے ہیں۔

جبکہ اس کے برعکس مجرموں اور متکبروں کو برے انجام سے دوچار ہوتا دیکھ کر لوگ عبرت حاصل کرتے ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published.