مال میں برکت کا وظیفہ

اللہ کے ہر نام میں بے پناہ تاثیر موجود ہے۔ ایسے بہت سارے وظائف ہیں۔ کہ جس کے پڑھنے سے انسان نہ صرف روحانی طور پر مالامال ہو سکتا ہے۔ بلکہ دنیاوی طور پر بھی اللہ تعالی اس کے لیے رزق کے دروازے کھول دیتے ہیں ۔یہ وظیفہ کیا ہے. اس کے بارے میں ان شاء اللہ ہم آپ کو آخر میں ضرور بتائیں گے۔ ہر انسان کی خواہش ہوتی ہے کہ وہ مال کمائے ہر انسان یہ چاہتا ہے کہ اس کے پاس تمام دنیا جہاں کی سہولیات موجود ہو۔ وہ کچھ بھی لینا چاہیے وہ کچھ بھی کم آنا چاہے۔

تو کمال وہ عزت چاہتا ہے شہرت اور دولت چاہتا ہے ۔لیکن ضروری نہیں کہ ہر انسان کی خواہش پوری ہو۔ بلکہ ہر انسان کو بقدرے محنت اللہ تعالی عطا فرماتے ہیں۔یاد رکھیں رزق وہی آپ کے جسم کا حصہ بن سکتا ہے اور اس ہی کی وجہ سے آپ نیک اعمال کی طرف متوجہ ہو سکتے ہیں کہ جو رزق حلال طریقے سے کمائی آگیا ہوں جس رزق کی کمائی میں کسی کا حق نہ مارا گیا ہو اور اسے حلال رزق سمجھا جاتا ہے کہ جس میں انسان نے کبھی بھی معنی نہ کی ہو بے ایمانی نہ کی ہو حلال رزق کمانے کے آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے ایک فضیلت بیان فرمائی جس کا مفہوم ہے کہ لاالہ اللہ کی بہترین عبادت رزق حلال کمانا ہے۔

وظیفہ کرنے کا طریقہ
آپ صلی اللہ علیہ وسلم کے پاس ایک صحابی تشریف لائے اور فرمایا یا رسول اللہ میرے حالات بہت خراب ہے میرے گھر میں کھانے پینے کو کچھ نہیں میری مدد فرمائے ہیں آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے ان سے فرمایا کہ میں تمہاری مدد کرتا ہوں تمہارے پاس ہے وہ لے کر آؤ وہ صحابی تشریف لے کر گئے اور گھر میں جو کچھ موجود تھا وہ لے کر آئے اور آپ صلی اللہ علیہ وسلم کے حوالے کردیا آپ صلی اللہ علیہ وسلم کے اردگرد صحابہ کرام تشریف فرما تھے دونوں چیزوں کو اپنے ہاتھوں میں بلند کیا اور فرمایا کون اس کو لیتا ہے ایک صحابی فرمانے لگے میں لیتا ہوں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *