گھٹنوں میں درد کا کامیاب علاج یورک ایسڈ ، جوڑوں کا پتھ۔را جانا

درحقیقت عمر بڑھنے کے ساتھ ہڈیاں بھی کمزور ہونے لگتی ہیں جس کے باعث جوڑوں کا درد لوگوں کو اپنا شک۔ار بنالیتا ہے اور اس کا سب سے زیادہ اثر گھٹنوں پر ہوتا ہے۔گھٹنوں میں تکلیف کسی حالیہ انج۔ری کا ن۔تیجہ ہو یا جوڑوں کے امراض کا نتیجہ، چند عام چیزوں کا خیال رکھ کر آپ اس مسئلے سے نجات یا اس میں کمی لانے میں کامیاب ہوسکتے ہیں۔بہت زیادہ آرام یا بیٹھے رہنے سے مسل۔ز کمزور ہوسکتے ہیں۔

جو جوڑوں کی تکلیف کو بدتر کرسکتا ہے۔ ایسی ورزشیں کرنا عادت بنائیں جو گھٹنوں کے لیے محفوظ ہوں اور ان کو کرنا عادت بنالیں۔ اگر آپ کو یقین نہ ہو کہ کونسی جسم۔انی سرگرمی محفوظ ہے یا نہیں یا کتنی دیر تک کرنی چاہیے، تو ڈاکٹر سے بات کریں۔کارڈی۔و ورزشیں جیسے چہل قدمی، سوئمنگ، سائیکل چلانا اور دیگر، مسلز کو مضبوط بنا کر گھٹنوں کو سپورٹ کرتی ہیں اور لچک بڑھاتی ہیں، وی۔ٹ ٹرین۔نگ اور اسکریچ۔نگ بھی فائدہ مند ہیں۔تکلیف دہ یا عدم توازن کے شک۔ار گھٹنے گرنے کا امکان بڑھاتے ہیں، جس سے گھٹنوں کو مزید نقصان بچ سکتا ہے۔ گرنے سے بچنے کے لیے گھر کو روشن رکھیں یا کسی چیز کا سہارا لیں۔اگر آپ کا جسمانی وزن زیادہ ہے تو اس میں کمی لانا گھٹنوں پر تناﺅ کم کرسکتا ہے، آپ کو مثالی وزن کے حصول کی ضرورت نہیں ہوتی، معمولی کمی بھی فرق پیدا کرسکتی ہے۔ایک بیساکھی یا چھ۔ڑی گھٹنوں پر سے تن۔اﺅ کمی لانے میں مدد دے سکتے ہیں، گھٹنوں پر چڑھائے جانے والے بریس۔ز بھی اسے مستحکم رکھنے میں مدد دے سکتے ہیں۔

زیادہ ورزشیں تکلیف دہ گ۔ھٹنوں کو مزید نق۔ص۔ان پہنچاسکتی ہیں، ایسی ورزشیں جیسے رنن۔گ، جمپن۔گ وغیرہ سے گریز کریں جبکہ اٹھ۔ک بیٹھ۔ک سے بھی بچیں کیونکہ اس سے بھی گھٹنوں پر دباﺅ بڑھ جاتا ہے۔گھٹنوں میں ہونے والے درد کی بڑی وجہ گ۔اؤٹ ہے جس میں یورک ایسڈ کی ز۔یادتی کے باعث گ۔اؤٹ پریشانی ہوسکتی ہے ۔ یورک ایسڈ کی صورت میں سب سے پہلے جسم کے چھوٹے جوڑ م۔تاثر ہوتے ہیں خاص طور پر پیروں کے انگوٹھے یا انگلیوں میں س۔رخی س۔وزش اور و۔رم کے ساتھ درد شروع ہوتا ہے اگر شروع میں یورک ایسڈ کی زیادتی کے مسئلے کو کنٹرول نہ کیا جائے تو وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ یہ جسم کے دوسرے جوڑوں میں پھیل جاتا ہے

ایسی صورت میں چند غذاؤن کے استعمال کرنے سے پیشاب کھل کر آتا ہے گردوں کی صفائی ہوتی ہے اسی طریقہ سے گردے خ و ن میں سے فاض۔ل مادوں کو فلٹ۔ر کرکے پیشاب کے راستے خارج کردیتے ہیں ۔ جوجوڑوں میں یا گھٹنوں میں درد کا باعث ہوتے ہیں ۔ یورک ایسڈ کی زی۔ادتی کو کنٹرول کرنے کیلئے کھیرے اور مولی کا استعمال بڑھا دیں۔ اس کے علاوہ سونف ، تخم خربوزہ ، تخم کھیرا اور گ۔وکھڑو چاروں چیزیں پانچ پانچ گرام کی مقدار میں لیکر دو کپ پانی میں جوش دیجئے جب پانی ایک کپ کے قریب رہ جائے تو چولہے سے اتار کر فلٹ۔ر کریں اور کوزہ مصری سے میٹھا کرکے نوش فرمائیں ۔ صبح شام دن میں دو مرتبہ استعمال کریں ۔ گردوں کو ڈی ٹ۔اکس کرنے کیلئے یورک ایسڈ کی زی۔ادتی کو کنٹرول کرنے کیلئے اور جوڑوں پر آچکی سوج۔ن اور و۔ر۔م کو ختم کرنے کیلئے بہت لاجواب چیز ہے ۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.