”خواتین کی وہ چھوٹی چھوٹی غلطیاں“

بعض اوقات انسان جانے انجانے میں کچھ ایسی غلطیاں کر جا تا ہے جس کا خمیازہ اسے ساری زندگی بھگتنا پڑتا ہے خواتین و حضرات آج ہم آپ کو ایسی ہی تین غلطیوں کے بارے میں بتانےجا رہے ہیں جو میاں بیوی یہ تین غلطیاں کر تے ہیں ان کے لیے رزق کا دروازہ بند کر دیا جا تا ہے رزق ایک ایسی نعمت ہے جس کی تقسیم کا اختیار و ذمہ مالکِ کائنات نے اپنے پاس رکھا ہے۔ کوئی شک نہیں کہ وہ ہر انسان کو طیب و طاہر اور پاک رزق عطا فر ما تا ہے اور اس رزق میں اضافہ و فراخی کے مواقع بھی بخشتا ہے مگر اکثر انسانوں کی فطرت ہے کہ وہ یہ بھول جا تے ہیں ۔

کہ رزق کا وعدہ رب تعالیٰ کی ذات نے کر رکھا ہے لہٰذا وہ ہماری قسمت میں لکھا گیا دانہ پانی تقدیر کے مطا بق ہمیں ضرور عطا فر ما تا ہے تا ہم کچھ لوگ تو کل اور یقین کی کمی کا شکار ہو کر قبل از وقت ضرورت سے زیادہ طلب کر تے یا لالچ کا شکار ہو کر بعض اوقات نا جا ئز و ح رام ذرائع کے استعمال سے اپنا حلال کا رزق بھی کھو دیتے ہیں اللہ تعالیٰ اور اس کے حبیب نے ہمیں رزقِ حلال کی طلب، کمانے کا طریقہ، تجارت اور کا روبار کے مکمل اصول سکھائے اور بتائے ہیں یہ اتل حقیقت ہے۔

کہ جب تک ہم اسلامی حدود اور شرعی تعلیمات کے مطا بق ملازمت کاروبار اور تجارت کر تے ہیں تب تک سب کچھ تھیک رہتا ہے لیکن جب ہم شر عی حدود سے تجاوز اور احکامِ الٰہی کی خلاف ورزی کے مر تکب ہو تے ہیں تو روزق میں سے بر کت اٹھنا شروع ہو جا تی ہے اور یوں بڑی بڑی فیکٹریوں اور کا ر خانوں کے ما لک بھی بھکاری بن جا یا کر تے ہیں میاں بیوی کے رشتے میں پہلی غلطی جو انسان کے رزق میں تنگی کا باعث بنتی ہے وہ غیر فطری طریقے سے قربت ہے یعنی بیوی کے پچھلے حصے میں قربت کر نا اور ش رم گاہ کو منہ لگا نا یہ ایک غیر فطری فعل ہے جس سے سختی سے منع کیا گیا ہے۔

اور ایسا کر نے والے میاں بیوی اکثر غربت اور محتاجی کا شکار ہو جا تے ہیں اور ساری زندگی بیماریوں اور پر یشانیوں میں مبتلا رہتے ہیں دوسرے نمبر پر جو غلطی ہمارے گھروں میں عام ہو چکی ہے وہ رات کو دیر تک جاگنے اور صبح دیر سے بیدار ہونے کی خراب عادت ہے اور یہ بری عادت اب ہماری طرز زندگی کا ایک اہم حصہ بن چکی ہے اور ہم کبھی یہ جاننے کی زحمت بھی نہیں کر تے کہ یہ بری عادت ہمیں کیا نقصانات پہنچا رہی ہے ہمارے پیارے نبی ﷺ نے ارشاد فر ما یا کہ جس گھر میں رات دیر تک جا گنے اور صبح دیر سے اُٹھنے کا رواج ہو جا ئے تو وہاں رزق کی تنگی اور بے بر کتی کو کوئی نہیں روک سکتا۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *